Urdu shayri

Urdu shayri
میری تشنگی کا خیال کر میں اداس ہوں مجھے دیکھ جا
میری بےبسی کا ملال کر میں اداس ہوں مجھے دیکھ جا

یہ جو ہجر ہجر ہے شام غم میری آنکھ بھی تو ہے دیکھ نم
میری حسرتوں کو وصال کر میں اداس ہوں مجھے دیکھ جا

میں تیرے خیال کے دشت میں سبھی راستوں سے گزر گیا
تو میرے غم کا خیال کر میں اداس ہوں مجھے دیکھ جا

یہ  تیرے ستم یہ تیرے کرم مجھے اور زوقِ جنون دے
میرا چلنا یوں نہ محال کر میں اداس ہوں مجھے دیکھ جا

میرا زرد چہرا ہے کس لیے یہ مکان اجڑا ہو کس لیے
نہ تو مجھ سے ایسے سوال کر میں اداس ہوں مجھے دیکھ جا

اے نئے دنوں کی اداس رت تو میرے وجود میں آکے رک
میری شدتوں کو بحال کر میں اداس ہو مجھے دیکھ جا..!!!
                                 




                                   :تنہا دل

پُرتکلف سی ، مہکتی ، وہ سُہانی چائے
اب کہاں ھم کو میّسر ھے تمہاری چائے

میں نے چینی کی بھی مقدار بڑھا کر دیکھا
بن ترے لگتی ھے کچھ کڑوی کسیلی چائے

میں تری یاد میں کھو جاتا ھوں بیٹھے بیٹھے
منہ مرا تکتی ھی رہ جائے ، بیچاری چائے

وہ مُجھے بُھول گئی، میں نہیں بُھولا اُسکو
ساتھ رھتی ھے شب و روز خیالی چائے

تیرے وعدوں سے بھرےخط بھی دکھانے ھیں تجھے
آج کی شام کو چائے ھے ــــــــ ضروری چائے !

ایک دن سو کے اُٹھوں میں، توُ مرے سامنے ھو
کاش ہاتھوں میں لئے ایک پیالی چائے

تھام کے ہاتھ کو، لاتی ھے مُجھے پاس ترے
بھاپ اُڑاتی ھوئی ، ٹیبل پہ ، دِوانی چائے

لمس ہاتھوں کا ترے، نا ھی محبّت کا سُرور
راس آئی نہ کبھی مجھ کو پرائی چائے

ڈال کے کپ میں تقاضائے محبت کا اُبال
یاد آتی ھے مُجھے تیری سوالی چائے

ھائے کیسے یہ گری ھے ترے ہاتھوں پہ، امـؔر
جھاڑو پیٹی سی ، مرن جوگی ، نگوڑی چائے...

No comments